علم نجوم کاتعارف

علم نجوم کاتعارف

Category : Astrology

بسم اللہ الرحمٰن الرحیم
Astrology With Sami
Lecture Number 4
مبادیات علم النجوم
FUNDAMENTAL OF ASTROLOGY) Part 01)
السلام وعلیکم: Astrology With Sami میں خوش آمدید….!
عزیزطلباء اور ناظرین علم نجوم کے جو بنیادی قواعدآپ لوگوں کو میں بتارہا ہوں انہیں اپنےحافطے میں اچھی طرح محفوظ کرلیں کسی بھی بات کو سمجھنےمیں دشواری محسوس ہو تومیری ویب سائٹwww.doctorsami.com پر یہ لیکچرزتحریری طور پرموجود ہیں.آپ میری ویب سائٹ وزٹ کرکےوہاں ان لیکچر کا مطالعہ کرسکتےہیں اور کسی بھی قسم کا سوال جوآپ کےذہن میں آئےپوچھ سکتے ہیں.
ہمارا آج کا لیکچرعلم نجوم کی ان بنیادی معلومات سے لبریز ہے جن پر علم نجوم کی عمارت کھڑی ہے.
منقلب نقاط : متقلب نقاط سےمرادمشرق،مغرب،شمال اور جنوب ہیں انہیں زاوئیےکا پہلا،چوتھا،ساتواں اوردسواں گھر بھی کہاجاتا ہے.
منقلب بروج: منقلب بروج چار ہیں یہ حمل،سرطان،میزان اورجدی ہیں.
استخراج زائچہ : یہ دراصل علم نجوم میں زائچہ بنانے کے ضروری حسابی عمل کو کہاجاتا ہے.
کردار: علم نجوم میں کردار ایک اہم موضوع ہے.اوربغیرکردار کےتجزئیےکہ صحیح پیش گوئی کرنامشکل ہے.اوراسی سےصاحب زائچہ کی زندگی مکمل طورپر سمجھ میں آسکتی ہے.کردارکی تشریح زمانہ ماضی سےچلی آرہی ہے اورآج تک ایسا نہیں ہواکہ کسی برج کی دوسیرتیں بنالی گئی ہوں.تمام سیارگان بھی کردار کےتجزئیےااپنا حصہ ادا کرتے ہیں.
مریخ: یہ سیارہ استحکام، توانائی اور حوصلہ کرتا ہے.
زحل: سیارہ زحل استحکام،تحمل،احتیاط ، تدبیر،سنجیدگی اور روحانی اطمینان عطا کرتا ہے.
زہرہ: سیارہ زہرہ نرمی اور محبت عطا کرتا ہے.
عطارد: کردار کے تجزیئے میں ذہانت اور دانشمندی پر حکمران ہے.
مشتری: سیارہ مشتری یقین،مذہب اور سوشل صفات پر حکمران ہے.
شمس: سیارہ شمس اخلاق،ثابت قدمی اور طرزعلم پر حکمران ہے.
قمر: سیارہ قمرحیوانیت اوروجدن پر حکمران ہے.
طالع پیدائش : طالع پیدائش عام فطرت کااظہارکرتا ہے.
اس کےعلاوہ جس برج میں سیاروں کی کثرت ہووہ بھی سیرت یا کردار پراثرات مرتب کرتا ہے.
کیمسڑی:عام کیمیائی عناصرکواکب کےماتحت ہوتےہیں ان کا تجربہ اورمطالعہ ایک الگ علم کی حیثیت سےجاناجاتا ہے جسےپراسرارکمیسڑی یا کیمیا گری کہاجاتاہے.
جدول مدت:(آثاروقت). یہ فرض کیاگیا ہےکہ قمرزندگی کےابتدائی چارسالوں پر حکمران ہےعطارددوسرےدس پراوراسی طرح دوسرےکواکب،انکی جدول بلاگ میں سے دیکھ کرنوٹ کرلیں.
کواکب مدت سالانہ مدت ماہانہ مدت
قمر 4 سال 90منٹ 7ڈگری30منٹ
عطارد 10 سال 36منٹ 3ڈگری
زہرہ 8 سال 45منٹ 3ڈگری45منٹ
شمس 19سال 19منٹ 1ڈگری35منٹ
مریخ 15سال 24منٹ 2ڈگری
مشتری 12 سال 30منٹ 2ڈگری30منٹ
زحل 30 سال 12منٹ 1ڈگری
یورانس 90 سال 4منٹ 5ڈگری20منٹ
نیچچوں 184سال 2منٹ 5ڈگری10منٹ
زندگی کا اور معلوم کرنے کے لئےزاویئے کے گھر، کامیابی کے گھراورزیروبم والے گھرلازمی معلوم ہونےچاہئیں.انکوبھی بلاگ میں سےدیکھ کراپنےپاس نوٹ کرلیں.میں زبانی طورپربتادیتا ہوں.
اس جدول کی مدد سےزندگی کادورانہیں سیارگان کی ترتیب وار پوزیش سے معلوم کرسکتےہیں.
کواکب زاویئےکےگھر کامیابی کےگھر زیروبم والےگھر
زحل 57 431/2 30
مشتری 79 57 10
مریخ 62 40 13
شمس 120 69-1/2 19
زہرہ 80 44 7
عطارد 70 48 20
قمر 108 63 24
انکواسطرح استعمال کیاجاسکتا ہے:
زحل کاایک زاویہ عام طورپر57سالوں کا ہوتا ہےاگرزیروبم سےمتاثرہورہاہوصرف30 سالوں کاہوگا لیکن پہلےان نقاط کواچھی طرح دیکھ لیں جن پرصحت اورزندگی کادارومدارہوتاہے.
دائرہ:دائرۃالبروج کامحیط جو360درجات کاہوتا ہے.
غیب دانی: غیرمعمولی بصیرت یاوجدانی آنکھوں سےدیکھنےکی صلاحیت جو کہ ابھی وقوع پذیرنہ ہوئی ہوں اس خاصیت پرعطاردحکمران ہے یعنی مستقبل کےحواس پرقابض ہے.
منتہائی مدت: علم نجوم میں ہرساتواں اورنواں سال منتہائی مدت کہلاتا ہےقمرکی بالترتیب پوزیشن کے لحاظ سےوہ ساتوں ون یا سال اپنے مقام سےتربیع کرتی ہے.اورہرنویں دن یا سال نظریثلیت بناتی ہے اوراس سے درج ذیل منتہائی مدت ملاخطہ فرمائیں.
7واں ، 9واں ، 14واں ، 18واں ، 21واں ، 27واں ، 28واں ، 35واں ، 36واں ، 42واں ، 45واں ، 49واں ، 54واں ، 56واں اور 63واں سال ہیں.
سردسیارے اور بروج: یہ سیارے قمراورزحل ہیں جبکہ سرطان اور جدی ہیں.
مجموعہ نور: یہ تعریف وقتی زائچے میں استعمال ہوتی ہے جس میں کوکب ان کواکب سے نظربنارہا ہو جو آپس میں نظرنہ بنارہےہوں.
کواکب سے منسوب رنگ: جدید جدول درج دیل ہے.
شمس(سہنرا) قمر(چاندی) مریخ(سرخ) زہرہ(آسمانی، سبز) عطارد(نارنجی)
مشتری(بنفشی) زحل(سبز ، بھورا) یورانس(گہرانیلا) نیچچوں(نیلگوں) ————-
بروج سے منسوب رنگ:
حمل: سفید،سرخ ثور: سرخ،چکوترا جوزا:سرخ،سفید سرطان: سبز اسد: سنہرا، سرخ
سنبلہ: بھورا
میزان: نیلا، قرمزی عقرب: گہرابھورا قوس:ہلکا سبز، ہلکا نیلا جدی: گہراخآکی، گہرابھورا
دلو: آسمانی حوت: چمکدارسفید
احتراق:شمس سے8درجہ 30دقیقہ کےدرمیاں کوکہتےہیں یعنی کہ ایک سیارہ شمس سےاتنا قریب ہوجائے.تمام وقتی زائچوں میں اس حالت کومدنظررکھا جاتاہے.
ارتفاع: یعنی بلندی.سیارگان.سیارگان کی بلندی
محیط: تمام اطراف سے گزرنا
عرض گردش: سیارگان کی طلوع کے وقت.زاویاتی فاصلےکےگردش
فرشتے:سیارگان کےفرشتے یہ ہیں.
شمس(میکائیل) قمر(جبرائیل) عطارد(رافیل) زہرہ(اینائیل)
مریخ(سیمائیل) مشتری(نراکیل) زحل(کیسئیل) ————
زاویئے: چارمنقلب نقاط ، یعنی پہلا چوتھا،ساتواں اوردسواں گھرفطری زائچےکاجنہیں طالع، نونقطہ عروج، مغربی زاویہ اورسمت القدم بھی کہا جاتا ہے.
جبلی نفرت:دواجسام جومختلف مقناطیسی کشش کی وجہ سےآپس میں موافقت نہ رکھتےہوں.
نقطہ محور: سیارےکانقطہ رمحورجوسورج سےکافی فاصلےپرہو.
اپریل: نجومی سال کا پہلا مہینہ
دلو: یہ دائرۃالبروج کاگیارہواں برج ہے. یہ بہت اہم اور کچھ پراسرارقسم کا برج ہے یہ انسانی جسم میں ٹانگوں، کہنیوں اور خون پر حکمران ہے.
حمل :یہ صفردرجہ سے30 درجہ طول البلد تک ہوتا ہےدائرۃالبروج کا پہلا برج ہےانسانی جسم میں سراورچہرےسےمتعلق ہے.
طالع: یہ زائچے کا پہلا گھرہوتا ہے زائچہ کاطالع بہت با قوت نقطہ ہوتا ہے.
طالعی : یہ سیارےجودسویں گھر سےمشرق کی جانب چوتھے گھرمیں طلوع ہوئے ہوں.
نظرات: یہ دراصل درجات کے مخصوص نمبر ہوتےہیں. ہرایک اپنی ایک علامت اور صفت رکھتا ہے.دائرۃالبروج360 درجات پر مشتمل ہوتا ہےاگرہم اس دائرےکےکسی نقطے کولے کراس کی مخصوص طریقےسےپیمائش کریں تو نجومی نظرات کاعلم ہوتاہے.
نظرات کی فطرت کوجانچنے کے لئےان برجوں کی فطرت کودیکھناپڑےگا جن سےکہ نظربنتی ہے.
سیارچے: ایک ہزارسےاوپرایسےاجسام ہیں جنہیں سیارچےکہاجاتا ہےجومشتری اورمریخ کےدرمیان نظرآتےہیں.
کوکبی : کسی مادےکی اعلٰی صفات جوطبعی زمین پراثراندازہوتی ہے.
کوکبی جسم: یہ ایک ایسا جسم ہے جو کوکبی روح رکھتا ہے یہ جذبات پراثرانداز ہوتا ہے اور آبی بروج پرحکمران ہے.
کوکبی نور: یہ نظرآنیوالےحصے جو ہماری کائنات کے گردپٹےہوئےہیں یہ جسم انسانی کےذہنی ارتعاش اورجذبات سے منعکس ہوتے ہیں.
علم نجوم: یہ وہ سائنس ہے جس میں ملوکتی اجسام کاانسان کی سیرت پراثرات کومطالعہ کیاجاتا ہےاورمادی دنیا میں اس کےاظہارکودیکھاجاتا ہے یہ علم،علم ہیئت کی روح ہے.
ہیئت دان: ایسےافرادجوستاروں کی درجہ بندی وغیرہ کرتےہیں.
علم ہیئت : بنیادی طورپرعلم نجوم اورعلم ہیئت ایک ہی سائنس ہیں لیکن علم ہیئت سیارگان کےفاصلے،وسعت،کمیت،مرکبات اورحراکت وغیرہ کواجاگرکرتاہے.
ب: تمام حروف تہجی کا دوسراحرف ہے،یہ گھرکی علامت ہے.
اہل بابل : ماضی میں علم نجوم کےماہرتھے یہ علم ان کے مذہب میں شامل تھا.
حیوانی بروج : حمل، ثور،اسد،قوس اور جدی ہیں.
دائرۃالمشتری : کیثرتعدادمیں دھندلی پٹی یا قطعہ سطح مشتری کےمتوازی نظرآتے ہیں اگراسکے موسم بادل والےتواسکی گردش میں یہ وقت متوازی قطارمیں لگاتےہیں اس سیارےتاریک حصہ تاریک حصہ نسبتاً کھلی فضامیں دیکھاجاسکتا ہے.
فائدہ مند : زہرہ اور مشتری دو فائدہ مند سیارےہیں.
مفید نظرات: تثلیت ، تسدیس اور تسمین ہیں.
مفیداثرات: یہ مفید سیاروں اورنظرات کی وجہ سے پیدا ہوتےہیں.
محاصرہ : ایک سیارہ دو نحس سیاروں کےدرمیان ہوتواسےمحاصرہ کہتےہیں یہ ہمیشہ انتہائی نحس صورت ہوتی ہےایک سیارہ مریخ اورزحل کے درمیان نحس ہوتا ہے لیکن جب زہرہ اور مشتری کے درمیان ہوتوبہت سعد ہوتا ہے.
ذوجسدین بروج : یہ جوزا،قوس اور حوت ہیں انہیں عام طورپردوہرےجسم والے بروج بھی کہتےہیں.
پیدائشی نشان : تمام پیدائشی اورداغ جو پیدائش کے وقت جسم پرہوتے ہیں انہیں پیدائش کے وقت سیارگان کی پوزیشن سے منسوب کردیا جاتا ہے.
پیدائشی وقت :وہ لمحہ جب شیرخواراس طبعی دنیامیں پہلی سانس لے، تمام مبتدی اور علم نجوم کےماننےوالوں کوچاہئےکہ خاندان کے تمام افرادکاپیدائش کا وقت نوٹ رکھاکریں.
ناقابل برداشت بروج : تمام آتشی بروج تلخ ہوتے ہیں.
شمالی بروج : چھ شمالی بروج حمل،ثور،جوزا،سرطان ، اسد اور سنبلہ ہیں.
ج : عربی حروف تہجی کا تیسراحرف ہے.
زیروبم : ان گھروں کوکہا جاتا ہے جوزاویئےسےگرجاتے ہیں یہ گھرتیسرے، چھٹے، نویں اور بارہویں ہیں.اس پوزیشن کو کمزور کہاجاتا ہے.وقتی زائچے میں ان گھروں میں سیارے تاخیر کا سبب ہوتے ہیں.Astrology سے متعلق ہماری آج کی گفتگو یہیں تمام ہوتی ہے. انشا اللہ اگلے لیکچر میں اس موضوع پر مذید بات کریں گے اور آپ کو مذید نئی نئی معلومات سے آگاہ کریں گے فی الحآل اجازت دیئجے اس دعا کے ساتھ کہ اللہ تعالٰی آپ کو آسانی عطا فرمائے اور آسانیاں بانٹنے کی تو فیق عطا فرمائے.امین.اللہ حآفظ.


Leave a Reply

SYED ZAHOOR HASSAN SAMI & ADNAN HASSAN SAMI….SHAJRA SHARIF

WhatsApp chat